صرف نیوز ہی نہیں حقیقی ویوز بھی

ضمانت پر رہا ملزم وکیل نے قانون شکنی کرتے ہوئے سسرالیوں پر حملہ کیا

63,034

ممبئی: ممبئی کے ساکی ناکہ پولیس اسٹیشن نے ایک وکیل کے خلاف اپنے مخالفین اور گواہان کو ڈرانے دھمکانے کا الزام کی پاداش میں مقدمہ درج کیا ہے۔ ساکی ناکہ میں رہائش پذیر شمس اللہ چودھری کی شادی 2014 ء میں ہوئی تھی اس کے خلاف اس کی اہلیہ نے گھریلو تشدد اور 498  کے تحت کیس درج کروایا ہے ،جس میں وہ ضمانت پر رہا بھی ہے۔

 اس کے باوجود شمس اللہ چودھری33 سالہ نے اپنے سسرال جاکر پہلے تو اپنی اہلیہ سعدیہ پر بدچلنی کا الزام لگا کر گھر کے باورچی خانہ میں گھس کر اسے زدوکوب کیا ۔مذکورہ وکیل کی ساس نے بتایا اسوقت جب ہم نے اس کی مخالفت کی تو میرے بیٹے کو بھی اس نے دھکا دے کر زدوکوب کیا۔ میری صاحبزادی جو موبائل میں اس پورے واقعہ کی عکس بندی کر رہی تھی تو اس نے موبائل چھین کر اس سے بھی بدسلوکی اور کہا کہ میراآپ لوگ کچھ نہیں بگاڑ سکتے۔

ملزم وکیل نے انہیں دھمکاتے ہوئے کہا پولیس میری جیب میں ہے اور میں سب قانون جانتا ہوں اسی دوران دروازے پر کھڑی بیٹی کے ہاتھ سے موبائل چھین کر پٹخ دیا اور مجھے دھکا دے کر فرار ہوگیا ۔اس کے بعد ہم نے پولیس اسٹیشن میں شکایت درج کروائی ۔

 شکایت کنندہ سعیدہ خیر النساء خان 61  نے ملزم پر کئی سنگین الزامات عائد کئے ہیں اور اس کے بعد پولیس نے معاملہ درج کر کے ملزم کو مفرور قرار دیدیا ہے۔پولس کاکہنا ہے کہ وہ اس معاملہ میں جلد ہی اسے گرفتار کرلےگی۔ ملزم کو اس سے قبل کے مقدمہ میں ضمانت پر رہا کیا گیا تھا جس میں شرائط عائد کی گئی تھی۔

 لیکن اسی کیس کے گواہان اور مخالفین پر ایک مرتبہ پھر ملزم نے حملہ کر دیا جس کے بعد پولیس نے اس کے خلاف ایک دیگر کیس درج کر لیا ہے ۔ ساکی ناکہ پولیس اسٹیشن میں ملزم کے خلاف مختلف دفعات 354,509,506,323,452,404,427  کے تحت معاملہ درج کر لیا ہے اور مزید تفتیش کر رہی ہے۔

Leave A Reply

Your email address will not be published.