صرف نیوز ہی نہیں حقیقی ویوز بھی

ممتا بنرجی نے بی جے پی کو کورونا سے زیادہ خطرناک قرار دیا

17,492

کلکتہ: مغربی بنگال کی وزیر اعلی ممتا بنرجی نے مرکز میں بر سراقتدار بی جے پی حکومت کے رویہ کو آمرانہ قرار دیتے ہوئے الزام لگایا کہ ”بھگوا پارٹی“ عالمی وبائی بیماری کورونا کو دلتوں کے خلاف حملے کے لئے استعمال کر رہی ہے۔ اترپردیش کے ہاتھرس میں مبینہ ”اجتماعی عصمت دری“ کیس کے خلاف احتجاجی مارچ کرنے والی ممتا بنرجی نے کہا کہ وہ آخر دم تک دلت برادری کے ساتھ کھڑی رہیں گی، کیونکہ ان کا مذہب ”انسانیت“ ہے اور وہ ذات پات اور مذہب کی بنیاد پر تفریق پر یقین نہیں رکھتی ہیں۔

اترپردیش کے ہاتھرس میں مبینہ ”اجتماعی عصمت دری“کے خلاف ممتا بنرجی کی قیادت میں ترنمول کانگریس نے دو کلو میٹر طویل لانگ مارچ کیا۔ برلا پلاٹینیم سے شروع ہوکر میو روڈ پر واقع گاندھی مجسمہ کے پاس یہ مارچ ختم ہوا۔ ممتا بنرجی نے اس استدلال کے ساتھ کہ ”کووڈ-19“سے کہیں بڑی بیماری بی جے پی ہے۔

ممتا بنرجی نے کہا کہ یہ دلت اور پسماندہ طبقات کے خلاف اس وبائی بیماری کو استعما ل کر رہی ہے۔ اس موقع پر ایک ریلی سے خطاب کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ ”ہمیں ان مظالم کے خلاف اٹھ کھڑا ہونا چاہیے“جس طرح کے مظالم ہو رہے ہیں وہ سراسر ناقابل قبول ہیں۔ انہوں نے کہا کہ ”ملک بھر میں آمریت جاری ہے۔ عوام کے بجائے یہ حکومت دلتوں اور کسانوں کے خلاف حکومت کام کر رہی ہے۔

کووڈ- 19 کے وبائی مرض سے نمٹنے میں مبینہ ناکامی کے لئے مرکزی حکومت کو مورد الزام ٹھہراتے ہوئے ممتا بنرجی نے کہا کہ ایسا معلوم ہوتا ہے کہ اس بیماری کا کمیونیٹی ٹرانس میشن ہوگیا ہے۔ کیونکہ ایسے افراد جو حفاظتی اور احتیاط کے ساتھ باہر جاتے ہیں اور حفاظتی ماحول میں رہتے ہیں وہ بھی بیماریوں کا شکار ہو رہے ہیں۔

Leave A Reply

Your email address will not be published.